pregnent women 32

کورونا وائرس کی وباء، ماہرین نے حاملہ ہونے کی خواہشمند خواتین کو وارننگ دے دی

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) کورونا وائرس کے باعث طبی ماہرین نے خواتین کو مصنوعی طریقہ افزائش ’آئی وی ایف‘ کے ذریعے بچے پیدا کرنے سے روک دیا۔ میل آن لائن کے مطابق یورپین سوسائٹی آف ہیومن ری پروڈکشن اینڈ ایمبریالوجی کے ماہرین نے خواتین کو ہدایت کی ہے کہ جب تک کورونا وائرس کی وباءختم نہیں ہو جاتی، تب تک آئی وی ایف کے ذریعے بچہ پیدا مت کریں کیونکہ اس وباءکی وجہ سے قبل از وقت پیدائش کی شرح بہت بڑھ گئی ہے۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ چین میں کورونا کی وجہ سے حاملہ خواتین کے ہاں بچوں کی قبل از وقت پیدائش کی شرح میں اضافہ ہوا ہے تاہم اس حوالے سے تاحال اعدادوشمار محدود ہیں اس لیے حتمی طور پر نہیں بتایا جا سکتا کہ شرح میں کتنا اضافہ ہوا ہے۔ چنانچہ جو خواتین آئی وی ایف کے ذریعے بچہ پیدا کرنا چاہتی ہیں انہیں چاہئیں کہ وہ اپنے بیضے فی الحال فریز کروا دیں اور جب وباءختم ہو جائے تو ان کے ذریعے بچہ پیدا کر لیں۔ رپورٹ کے مطابق دنیا بھر میں حاملہ خواتین، جن کے ہاں آئندہ ایک سے دو ماہ کے دوران بچوں کی پیدائش متوقع ہے، کورونا وائرس کی وجہ سے شدید متفکر ہیں کیونکہ بچوں کو کورونا وائرس لاحق ہونے کا خطرہ بھی زیادہ ہے اور اس سے بچوں کی موت ہونے کی شرح بھی بالغ افراد کی نسبت کئی گنا زیادہ ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں